مملکت سعودی عرب

منصف نے 'دیس پردیس' میں ‏ستمبر 23, 2011 کو نیا موضوع شروع کیا

  1. منصف

    منصف -: منفرد :-

    شمولیت:
    ‏جولائی 10, 2008
    پیغامات:
    1,920
    مملک سعودی عرب

    سعودی عرب کو اسکے 81 ویں یوم الوطنی پر مبارکباد
    مملکت سعودی عرب کا باقائدہ قیام 1932 بمطابق 1351 ہجری کو ہؤا



    تاریخ
    مملکت سعودی عرب جزیرہ نمائے عرب میں سب سے بڑا ملک ہے ۔ شمال مغرب میں اس کی سرحد اردن، شمال میں عراق اور شمال مشرق میں کویت، قطر اور بحرین اور مشرق میں متحدہ عرب امارات، جنوب مشرق میں اومان، جنوب میں یمن سے ملی ہوئی ہے جبکہ خلیج فارس اس کے شمال مشرق اور بحیرہ قلزم اس کے مغرب میں واقع ہے ۔ یہ حرمین شریفین کی سرزمین کہلاتی ہے کیونکہ یہاں اسلام کے دو مقدس ترین مقامات مکہ مکرمہ اور مدینہ منورہ میں موجود ہیں۔

    سعودی ریاست کا ظہور تقریباً 1750ء میں عرب کے وسط سے شروع ہوا جب ایک مقامی رہنما محمد بن سعود معروف اسلامی شخصیت اور مجدد محمد بن عبدالوہاب کے ساتھ مل کر ایک نئی سیاسی قوت کے طور پر ابھرے ۔

    نجد کا سعودی خاندان انیسویں صدی کے آغاز میں جزیرہ نمائے عرب کے بہت بڑے حصے پر قابض ہو گیا تھا لیکن مصری حکمران محمد علی پاشا نے آل سعود کی ان حکومت کو 1818ء میں ختم کردیا تھا۔ سعودی خاندان کے افراد اس کے بعد تقریباً 80 سال پریشان پھرتے رہے یہاں تک کہ 20 ویں صدی کے اوائل میں اسی خاندان میں ایک اور زبردست شخصیت پیدا ہوئی جس کا نام عبدالعزیز ابن سعود تھا جو عام طور پر سلطان ابن سعود کے نام سے مشہور ہیں۔



    ابن سعود انیسویں صدی کے آخر میں اپنے باپ کے ساتھ عرب کے ایک ساحلی شہر کویت میں جلا وطنی کی زندگی گذار رہے تھے۔ وہ بڑے با حوصلہ انسان تھے اور اس دھن میں رہتے تھے کہ کسی نہ کسی طرح اپنے آبا و اجداد کی کھوئی ہوئی حکومت دوبارہ حاصل کرلیں۔ آخر کار 1902ء میں جبکہ ان کی عمر تیس سال تھی، انہوں نے صرف 25 ساتھیوں کی مدد سے نجد کے صدر مقام ریاض پر قبضہ کرلیا۔ اس کے بعد انہوں نے باقی نجد بھی فتح کرلیا۔ 1913ء میں ابن سعود نے خلیج فارس کے ساحلی صوبے الحساء پر جو عثمانی ترکوں کے زیر اثر تھا، قبضہ کرلیا۔ اس کے بعد یورپ میں پہلی جنگ عظیم چھڑ گئی جس کے دوران ابن سعود نے برطانیہ سے دوستانہ تعلقات تو قائم رکھے لیکن ترکوں کے خلاف کوئی کاروائی نہیں کی۔ جنگ کے خاتمے کے بعد شریف حسین نے خلیفہ بننے کا اعلان کردیا تو ابن سعود نے حجاز پر بھرپور حملة کردیا اور چار ماہ کے اندر پورے حجاز پر قبضہ کرلیا اور 8 جنوری 1926ء کو ابن سعود نے حجاز کا بادشاہ بننے کا اعلان کرد

    [​IMG]

    اگلے ڈیڑھ سو سال میں آل سعود کی قسمت کا ستارہ طلوع و غروب ہوتا رہا جس کے دوران جزیرہ نما عرب پر تسلط کے لئے ان کے مصر، سلطنت عثمانیہ اور دیگر عرب خاندانوں سے تصادم ہوئے ۔ بعد ازاں سعودی ریاست کا باقاعدہ قیام شاہ عبدالعزیز السعود کے ہاتھوں عمل میں آیا۔


    1902ء میں عبدالعزیز نے حریف آل رشید سے ریاض شہرلیا اور اسے آل سعود کا دارالحکومت قرار دیا۔ اپنی فتوحات کا سلسلہ جاری رکھتے ہوئے انہوں نے 1913ء سے 1926ء کے دوران الاحساء، قطیف، نجد کے باقی علاقوں اور حجاز (جس میں مکہ مکرمہ اور مدینہ منورہ کے شہر شامل تھے) کو بھی فتح کرلیا۔ 8 جنوری 1926ء کو عبدالعزیز ابن سعود حجاز کے بادشاہ قرار پائے ۔ 29 جنوری 1927ء کو انہوں نے شاہ نجد کا خطاب حاصل کیا۔ 20 مئی 1927ء کو معاہدہ جدہ کے مطابق برطانیہ نے تمام مقبوضہ علاقوں جو اس وقت مملکت حجاز و نجد کہلاتے تھے پر عبدالعزیز ابن سعودکی حکومت کو تسلیم کرلیا۔ 1932ء میں برطانیہ کی رضامندی حاصل ہونے پر مملکت حجاز و نجد کا نام تبدیل کر کے مملکت سعودی عرب رکھ دیا گیا۔

    مارچ 1938 میں تیل کی دریافت نے ملک کو معاشی طور پر زبردست استحکام بخشا اور مملکت میں خوشحالی کا دور دورہ ہوگیا۔سعودی عرب کی حکومت کا بنیادی ادارہ آل سعود کی بادشاہت ہے

    1992ء میں اختیار کئے گئے بنیادی قوانین کے مطابق سعودی عرب پر پہلے بادشاہ عبدالعزیز ابن سعود کی اولاد حکمرانی کرے گی اور قرآن ملک کا آئین اور شریعت حکومت کی بنیاد ہے


    جغفرایہ
    ویسے تو سعودی عرب کو پانچ منطقے میں تقسیم کیا جاتا ہے
    1- منطقہ شرقیہ
    2- منطقہ غربیہ
    3- منطقہ وسطیٰ
    4- منطقہ جنوبی
    5- منطقہ شمالی

    [​IMG]

    لیکن سعودی عرب کو انتظامی لحاظ سے تیرہ علاقوں یا صوبوں میں تقسیم کیا گیا ہے، جنکو عربی زبان میں مناطق (عربی واحد: منطقہ) کہتے ہیں

    1 الباحہ
    2 الحدود الشماليہ
    3 الجوف
    4 المدينہ
    5 القصيم
    6 الرياض
    7 الشرقيہ
    8 عسير
    9 حائل
    10 جيزان
    11 الحجاز
    12 نجران
    13 تبوک

    [​IMG]
    ---------------------------------
    سعودے عرب : بادشاہوں کی فرہست

    پہلے :‌
    بانی سعودی عرب
    عبدالعزیز بن عبدالرحمٰن آل سعود

    مدت بادشاہت : 22 ستمبر 1932 سے 9 نومبر 1953


    دوسرے :
    ابن سعود کے بعد ان کے بڑے صاحبزادے سعود بن عبدالعزیز تخت نشین ہوئے۔

    شاہ سعود بن عبدالعزیز

    مدت بادشاہت :1953-1964

    تیسرے :
    شاہ سعود کے بعد انکے بھائی شاہ فیصل تخت نشین ہوئے۔
    شاہ فیصل بن عبدالعزیز السعود
    مدت بادشاہت : 1964-1975
    25 مارچ 1975ء کو ان کے بھتیجے نے شاہی دربار میں گولی مار کر انہیں شہید کردیا۔


    چوتھے :
    شاہ فیصل کے بعد ان کے بھائی خالد بن عبدالعزیز تخت پر بیٹھے۔
    شاہ خالد بن عبدالعزیز السعود
    مدت بادشاہت : 1975-1982


    پانچویں :
    شاہ فہد اپنے بھائی شاہ خالد کی وفات کے بعد سعودی کے بادشاہ مقرر ہوئے
    شاہ فہد بن عبدالعزیز السعود
    مدت بادشاہت : 1982-2005


    چھٹے (تاحال) :
    یکم اگست 2005ء کو شاہ عبداللہ نے اپنے رضاعی بھا ئی شاہ فہد کی وفات کے بعد تخت سنبھالا.
    شاہ بداللہ بن عبدالعزیز السعود
    مدت بادشاہت : 2005 تاحال


    سعودی عرب کا قومی ترانہ

    سعودی قومی ترانے کے الفاظ ابراہیم خفجی نے لکھے تھے اور اس کو 1984ء میں ترانہ کے طور پر اپنایا گیا۔اس کی موسیقی مصری موسیقار عبدالرحمن نے ترتیب دی تھی۔


    سارعي للمجد و العلياء
    مجدي لخالق السماء
    وارفعي الخفاق الاخضر
    يحمل النور المسطر
    رددي الله أكبر
    يا موطني
    موطني عشت فخر المسلمين
    عاش الملك
    للعلم والوطن



    اردو ترجمہ :
    شتابی کے وقار اور تفویق
    خالق جنت کی خوبصورتی
    سبز پرچم کو اٹھاو
    روشنی کی صورت میں
    دہرائیں. اللہ سب سے بڑا ہے
    اے میرے وطن
    میرے وطن جیو، مسلمانوں کا افتخار بن کر
    اے بادشاہ لمبی عمر پاو
    پرچم اور وطن کے لیے



    انگریزی ترجمہ :
    Hasten to glory and supremacy,
    Glorify the Creator of the heavens!
    And raise the green flag
    Carrying the emblem of Light
    Repeating: Allah is the greatest
    O my country
    My country, Live as the glory of Muslims
    Long live the King
    for the flag and the country


    پرچم
    سعودی عرب کا پرچم (جھنڈا) 15 مارچ 1973 سے استعمال کیا گیا
    [​IMG]




    قومی شعار (نشان)

    قومی نشان کو سعودی 1950 میں اپنایا گیا
    [​IMG]



    آبادی
    2010 کی مردم شماری کے مطابق سعودی عرب کی کل آبادی 25,731,776 ہے
    جن میں سے غیر سعودی 5,576,076 ہیں
    31 فیصد خارجیوں (غیر سعودی) ہیں جن میں سب سے بڑی تعداد بھارتیوں کی ہے (1.3 میلین)









     
    Last edited by a moderator: ‏ستمبر 25, 2011
    • پسندیدہ پسندیدہ x 2
  2. marhaba

    marhaba ركن مجلس علماء

    شمولیت:
    ‏فروری 5, 2010
    پیغامات:
    1,667
    جزاک اللہ خیرا
     
  3. حرب

    حرب -: مشاق :-

    شمولیت:
    ‏جولائی 14, 2009
    پیغامات:
    1,082
    ماشاء اللہ بہت اچھی اور معلوماتی شیئرنگ ہے۔۔۔ -------------------------
     
    Last edited by a moderator: ‏ستمبر 24, 2011
  4. ابو یاسر

    ابو یاسر -: ممتاز :-

    شمولیت:
    ‏اگست 13, 2009
    پیغامات:
    2,413
    کیرالا اور حیدرآباد والے ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔لولز:00003:
     
  5. منصف

    منصف -: منفرد :-

    شمولیت:
    ‏جولائی 10, 2008
    پیغامات:
    1,920
    میں نے نقشہ بھی پوسٹ کیا تھا ، "امیج شیک" سے ، رجسٹر ہوکر ، مگر پھر بھی تصویر نہیں آئی ۔۔۔۔میں نے اس سے بھی پہلے ایک دو بار تصویریں (غیر جاندار کی) شئیر کرنے کی کوشش کی لیکن نہ آسکی
    کیا کوئی بھائی اسکی وجہ بتاسکتا ہے ؟؟
     
  6. منصف

    منصف -: منفرد :-

    شمولیت:
    ‏جولائی 10, 2008
    پیغامات:
    1,920
    ایک غلطی کی اصلاح کرلیں سعودی عرب کا یوم الوطنی 81 سال کا نہیں بلکہ 79 سال کا ہے ۔۔۔۔۔۔شکریہ
     
  7. راہگیر

    راہگیر -: محسن :-

    شمولیت:
    ‏اگست 5, 2011
    پیغامات:
    158
  8. ابوعکاشہ

    ابوعکاشہ منتظم

    رکن انتظامیہ

    شمولیت:
    ‏اگست 2, 2007
    پیغامات:
    15,902
    بھائی درج ذیل ویب سائیٹ پر تصاویر اپ لوڈ کر شیئر کریں‌۔
    TinyPic - Free Image Hosting, Photo Sharing Video Hosting
    اچھااااااا۔ معلوم نہیں ۔ میرا تو خیال ہے کہ 81 ہے ۔
     
  9. عائشہ

    عائشہ ركن مجلس علماء

    شمولیت:
    ‏مارچ 30, 2009
    پیغامات:
    24,487
    اميج شيك پر اپ لوڈ کیے گئے اميجز كے ساتھ يہ مسئلہ ہو رہا ہے کہ وہ تب نظر آتے ہيں جب آپ وہاں لاگ ان ہوں۔ مجھے اس وقت نقشے درست نظر آ رہے ہیں۔
    ايك بات بتائيے۔ عنوان ميں آپ مملكت سعودى عرب كہنا چاہتے ہيں یا ملک؟
     
  10. منصف

    منصف -: منفرد :-

    شمولیت:
    ‏جولائی 10, 2008
    پیغامات:
    1,920
    جی بہت شکریہ ، رہنمائی کرنے کا ۔۔
    واقعی جب لاگ ان ہوتا ہوں‌تب امیج نظر آتی ہے ، لیکن مسئلہ یہ ہے کہ ہروقت لاگ ان تو ہونے سے رہا
    اور اگر ہو بھی جائے تو "سیشن" ختم ہونے پر خود ہی لاگ آؤٹ ہوجاتا ہے ۔۔۔اس کا کیا حل کریں ؟
    میرا خیال ہے کہ "عکاشہ" نے جو حل بتایا ہے اس پر عمل کیا جائے ۔۔۔۔

    اور عنوان "مملکت" لکھنا چاہا لیکن غلطی سے "مملک" ہوگیا ، ابھی ترمیم کا آپشن بھی نہیں ہے ۔۔
     
  11. منصف

    منصف -: منفرد :-

    شمولیت:
    ‏جولائی 10, 2008
    پیغامات:
    1,920
    بہت شکریہ ! اس پر عمل کرتا ہوں‌
    سعودی عرب کا یوم الوطنی 79 سال کا تھا کیونکہ مملکت "سعودی عرب " باقائدہ 1932 میں بنا
    اس حساب سے اب تک 79 سال ہوچکے ہیں ۔۔
    ویسے دوسری جگہ اور اخبار میں بھی 79 سال کا ہی پڑھا تھا ۔۔۔۔
     
  12. ابومصعب

    ابومصعب -: منفرد :-

    شمولیت:
    ‏اپریل 11, 2009
    پیغامات:
    4,067
    زبردست معلوماتی موضوع ہے۔
    تھینکس۔جزاک اللہ خیرا
     
  13. ابوعکاشہ

    ابوعکاشہ منتظم

    رکن انتظامیہ

    شمولیت:
    ‏اگست 2, 2007
    پیغامات:
    15,902
    ترمیم کردی گئی تھی۔ اب تصاویر نظر آرہی ہیں ۔ بحرکیف سعودیہ می‌81 یوم الوطنی منایا گیا ۔
    مزید تفصیل ۔۔۔۔۔
     
  14. عائشہ

    عائشہ ركن مجلس علماء

    شمولیت:
    ‏مارچ 30, 2009
    پیغامات:
    24,487
    ميرا خيال تھا ميرا ميتھس خراب ہے ۔۔۔
    آسان سى بات ہے ہجری اور قمرى سالوں کے فرق كى وجہ سے 79 واں بھی ہے اور 81 واں بھی۔
    1932___ 2011= 79
    1351___ 1432=81
    ہجرى سال مختصر ہوتے ہيں ۔
     
  15. جاسم منیر

    جاسم منیر Web Master

    شمولیت:
    ‏ستمبر 17, 2009
    پیغامات:
    4,636
    جزاکم اللہ خیرا
    عمدہ معلومات ہیں۔
     
  16. منصف

    منصف -: منفرد :-

    شمولیت:
    ‏جولائی 10, 2008
    پیغامات:
    1,920
    ہم م م !!!! اب کنفیوژن دور ہوئی نا ۔۔۔۔
    یعنی دیکھے کتنی اچھی بات ہے کہ یہ لوگ عربی تایخ کو کتنی اہمیت دیتے ہیں
    اور ایک ہم ہیں 14 اگست تو زبانی رٹا ہوا ہے ، مگر اسکی عربی تاریخ27 رمضان المبارک 1366
    کم ہی لوگ جانتے ہونگے
    مطلب یہ کہ انگریزی تاریخ کے حساب سے اس سال (2011) پاکستان چونسٹھ(64) سال کا جبکہ اسلامی
    حساب سے چیاسٹھ (66) سال کا ہوگیا

    بہت بہت شکریہ
     
    Last edited by a moderator: ‏ستمبر 25, 2011
  17. مخلص1

    مخلص1 -: منفرد :-

    شمولیت:
    ‏جنوری 25, 2010
    پیغامات:
    1,038
    اللہ مملکت سعودیہ عربیہ کو ہر قسم کے فتنے سے محفوظ رکھے۔۔۔۔۔اور اللہ اس طرح کے کئی 81 سال اہلیان سعودیہ اور حکمران سعودیہ کو دیکھنے کو ملے آمین
     
  18. ابوعکاشہ

    ابوعکاشہ منتظم

    رکن انتظامیہ

    شمولیت:
    ‏اگست 2, 2007
    پیغامات:
    15,902
    آمین یا رب العالمین
     
  19. حرب

    حرب -: مشاق :-

    شمولیت:
    ‏جولائی 14, 2009
    پیغامات:
    1,082
    السلام علیکم۔
    اس تحریر کو میں نے کئی مرتبہ پڑھا ہے۔۔۔ اس لئے بہت سی باتیں ایسی ہیں جن کو پڑھنے کے بعد میرے ذہن میں کئی سوالات پیدا ہوئے مگر اس لئے نہیں لکھے یا پوچھنا گوارہ کیا کہیں اس پوری تحریر پر جو محنت ہوئی ہے وہ کسی بھی صورت متاثر ہو لہذا اگر میں کچھ پوچھنا یا شیئر کرنا چاہوں تو کوئی عیب تو نہیں؟؟؟۔۔۔ شکریہ
    والسلام علیکم۔
     
  20. ابوعکاشہ

    ابوعکاشہ منتظم

    رکن انتظامیہ

    شمولیت:
    ‏اگست 2, 2007
    پیغامات:
    15,902
    وعلیکم السلام ورحمتہ اللہ ۔
    اس موضوع میں صرف مملکت سعودی عرب کی معلومات فراہم کی گئی ہیں اس لیے کوئی بھی سوال پوچھنے سے پہلے یاد رہے کہ ان باتوں کا تعلق موضوع سے ہو ۔ موضوع سے غیر متعلقہ سوالات یا پوسٹس حٍذف کرنے کااخیتارتوبہرحال انتظامیہ کے پاس محفوظ ہے ۔
     
Loading...

اردو مجلس کو دوسروں تک پہنچائیں