سعودی عرب میں Skype پر پابندی کا خطرہ

اعجاز علی شاہ نے 'آئی ٹی کی دنیا' میں ‏مارچ 25, 2013 کو نیا موضوع شروع کیا

  1. اعجاز علی شاہ

    اعجاز علی شاہ -: ممتاز :-

    شمولیت:
    ‏اگست 10, 2007
    پیغامات:
    10,324
    ابھی آج عرب نیوز پر یہ بری نیوز پڑھنے کو مل رہی ہے۔ ہم لوگ گذشتہ 8 سال سے اس پر بات کررہے ہیں پاکستان کے ساتھ۔

    Skype faces ban in Saudi Arabia | ArabNews
     
  2. انور علی

    انور علی -: محسن :-

    شمولیت:
    ‏نومبر 29, 2011
    پیغامات:
    144
    بلکل بھائی میں نے بھی پڑھی نیو ز میں،

    بلکہ صرف سکائپ ہی نہیں واٹس اپ،اور وائیبر بھی ان کے نشانے پر ہے۔۔۔
    لیکن میرے دوست کہتے ہے کہ دبئی میں پہلے سے ہی سکائپ بند ہے جبکہ لوگ چائینز سکایپ استعمال کر رہے ہے۔۔
    ؟؟؟
     
  3. عطاءالرحمن منگلوری

    عطاءالرحمن منگلوری -: ماہر :-

    شمولیت:
    ‏اپریل 9, 2012
    پیغامات:
    1,478
    ماہرین کوئی طریقہ ڈھونڈ نکالیں گے۔ضرورت ایجاد کی ماں ویسے تو نہیں ۔وجہ کیا بتائی جارہی ہے؟
    پاکستان میں یو تیوب پہ پابندی ہے مگر لوگ استعمال کر رھے ہیں۔ اسی لئے چپ ہیں۔
     
  4. انور علی

    انور علی -: محسن :-

    شمولیت:
    ‏نومبر 29, 2011
    پیغامات:
    144
    کہ رہے ہے کہ پرائیویسی کا مسلہ ہے،

    مجھے تو لگتا ہے موبائل کمپنیوں کی کوئی سازش ہے کیونکہ آجکل انٹرنیشنل موبائل کا استعمال بہت کم ہو گیا ہے۔
     
    Last edited by a moderator: ‏مارچ 25, 2013
  5. انور علی

    انور علی -: محسن :-

    شمولیت:
    ‏نومبر 29, 2011
    پیغامات:
    144
    اور ان سوفٹ وئیر والوں کو بھی انتباہ کر دی ہے کہ اس ہفتے کے آخر تک ٹریسننگ سسٹم لگا دے ورنہ سب بلاک۔

    اب یہ لوگ پرائیویٹ ویڈیوز کال ٹیپ کرے گے ۔۔ تو بہ ہے ۔۔

    اب میسجنگ کو کون ٹریس کرے گااور پھر ایک سوفٹ وئیر پر جو فری ہے اور لاکھوں لوگ استعمال کر رہے ہے۔۔
    مُخ ما فی۔۔۔
    :00039:
     
  6. ابوعکاشہ

    ابوعکاشہ منتظم

    رکن انتظامیہ

    شمولیت:
    ‏اگست 2, 2007
    پیغامات:
    15,902
    ابتسامہ ۔ لا ، مُخ فی ۔ ریال مافی ۔
    ایک مقامی کومیں نے یہ خبرسنائی کہ سکایپ ، وٹس اپ اور وائبر وغیرہ پر پابندی لگنے والی ہے تو اس کا کہنا تھا کہ '' کلام فاضی '' بظاہر تو ایسا لگتا ہے کہ ایسا ہونا ناممکن ہے ، لیکن کوئی بعید بھی نہیں‌۔
     
  7. Ishauq

    Ishauq -: ممتاز :-

    شمولیت:
    ‏فروری 2, 2012
    پیغامات:
    9,612
    سعودی حکومت غیرملکیوں کے خلاف ایسے اقدام کیوںکر رھی ہے؟ اس چيز کا محرک کیا ہے.
     
  8. ابومصعب

    ابومصعب -: منفرد :-

    شمولیت:
    ‏اپریل 11, 2009
    پیغامات:
    4,067
    السلام علیکم

    ویسے اس حوالے سے وائپ سرویسز بھی شائد کیا اس لپیٹ میں‌آئینگے!!! اگر تو پھر یاہو اور گوگل اور مختلف وائس سروسز کا کیا ہوگا۔۔۔۔! ؟؟

    یہ وائبر وائپس ہی تو نہیں‌ہیں۔۔۔!؟
     
  9. زاہد محمود

    زاہد محمود -: محسن :-

    شمولیت:
    ‏ستمبر 5, 2007
    پیغامات:
    179
    السلامُ علیکم!
    سعودی لوگ واقعی مخ مافی ہیں
     
  10. ابو عبیدہ

    ابو عبیدہ محسن

    شمولیت:
    ‏فروری 22, 2013
    پیغامات:
    1,001
    نہیں ہرگز ایسا نہیں ہے۔ ہاں بے عمل کہہ سکتے ہیں
     
  11. زبیراحمد

    زبیراحمد -: ماہر :-

    شمولیت:
    ‏اپریل 29, 2009
    پیغامات:
    3,446
    سعودی عرب:’ٹوئٹر صارفین کی نگرانی کا منصوبہ‘

    سعودی عرب مائیکرو بلاگنگ کی ویب سائٹ ٹوئٹر کے صارفین کے لیے نام نہ ظاہر کرنے کی سہولت کو محدود کر کے شناختی دستاویزات کے ذریعے سائٹ تک رسائی کی اجازت دینے کوشش کر رہا ہے۔

    یہ عمل حکام کو ملک میں بعض افراد کے ٹوئٹس کی نگرانی کرنے میں آسانی فراہم کرے گا۔


    مائیکرو بلاگنگ کی سائٹ سعودی عرب میں بہت مقبول ہے اور اس پر ملک میں حساس سمجھے جانے والے موضوعات پر بحث کی جاتی ہے جن میں مذہب اور سیاست شامل ہیں۔

    گزشتہ ہفتے ہی سعودی عرب کے ٹیلی کمیونیکشن کے نگران ادارے نے خبردار کیا تھا کہ سوشل ایپلیکشنز یا ایسے موبائل سہولیات جن سے رابطے مفت اور سہولت سے ہوتے ہیں جیسا کہ وٹس ایپ، وائبر اور سکائپ تک رسائی کو سعودی عرب میں بند کیا جا سکتا ہے۔

    خیال رہے کہ سعودی عرب میں انٹرنیٹ کی سخت نگرانی کی جاتی ہے اور انٹرنیٹ کی سروس مہیا کرنے والی کمپنیاں فحش یا غیر مناسب مواد کو بلاک کرنے کے لیے قانونی طور پر پابند ہیں۔

    رواں ماہ کے شروع میں سعودی وزارتِ داخلہ کے ترجمان نے کہا تھا کہ سماجی رابطوں کی ویب سائٹ خاص طور پر ٹوئٹر کو شدت پسند معاشرے میں بدامنی پھیلانے کے لیے استعمال کرتے ہیں۔

    برطانوی خبر رساں ادارے رائٹرز کے مطابق دو ہفتے پہلے سعودی عرب کے ایک نمایاں مذہبی رہنما سلمان ال آودا نے ٹوئٹر کے ذریعے حکومت کی سکیورٹی پالیسی کو بہت سخت قرار دیتے ہوئے مطالبہ کیا تھا کہ وہ بہتر سہولیات فراہم کرے۔ انہوں نے خبردار کیا تھا کہ ایسا نہ کرنے کی صورت میں اسے’ تشدد بھڑک‘ اٹھنے کی صورتحال کا سامنا کرنا پڑ سکتا ہے۔

    ان مذہبی رہنما کو ٹوئٹر پر چوبیس لاکھ افراد فالو کرتے ہیں۔ اس کے علاوہ رواں ماہ حقوق انسانی کے دو کارکنوں کو ’انٹرنیٹ پر جرائم‘ سمیت مختلف الزامات کے تحت لمبی مدت کے لیے جیل بھیج دیا گیا تھا۔ ان پر انٹرنیٹ پر جرائم کا الزام اس لیے عائد کیا گیا تھا کیونکہ وہ ٹوئٹر اور دوسری سائٹس کو حکومت پر تنقید کے لیے استعمال کرتے تھے۔

    سعودی عرب میں کے شاہ عبداللہ سمیت شاہی خاندان کے کئی افراد ٹوئٹر کا استعمال کرتے ہیں۔
    اشاعت: ہفتہ 30 مارچ 2013
    بی بی سی اردوڈاٹ کام
     
  12. ابو عبیدہ

    ابو عبیدہ محسن

    شمولیت:
    ‏فروری 22, 2013
    پیغامات:
    1,001
    نہ تو ہم اس کی مخالفت کرتے ہیں کیونکہ سیاسی طور پر حساس معاملہ ہے اور نہ ہی اس کی حمایت کرتے ہیں کیونکہ دینی طور پر حق کا پرچار ہر مسلمان پر فرض ہے۔ جیسے مشہور حدیث بلغوا عنی و لو آیۃ میں امر کا صیغہ استعمال کیا گیا ہے۔ اور ہر شخص اپنی اپنی استطاعت کے مطابق اس کا مکلف ہے۔ واللہ اعلم بالصواب
     
  13. کنعان

    کنعان محسن

    شمولیت:
    ‏مئی 18, 2009
    پیغامات:
    2,850
    السلام علیکم

    دبئی سے سکائیپ استعمال میں‌ ھے۔

    والسلام
     
Loading...

اردو مجلس کو دوسروں تک پہنچائیں