داڑھی والے مسلم نوجوان کو کرکٹ بیٹ شرٹ میں چھپا کر لے جانے پر دہشت گرد قرار دے دیا گیا

عائشہ نے 'اسلام اور معاصر دنیا' میں ‏نومبر 30, 2014 کو نیا موضوع شروع کیا

  1. عائشہ

    عائشہ ركن مجلس علماء

    شمولیت:
    ‏مارچ 30, 2009
    پیغامات:
    24,488
    برسلز: دہشت گردی کا خوف یورپی ممالک کے سر پرکتنا سوار ہوچکا ہے اس کا ایک مظاہرہ بیلجیم میں نظرآیا جہاں پاکستانی نوجوان کو بس میں سفر کے دوران کرکٹ بیٹ کو اپنی شرٹ میں چھپا کر لے جانے پر دہشت گرد قرار دے کر پوری فیملی کو ملک چھوڑنے کا حکم جاری کردیا گیا ہے۔

    برطانوی اخبار ’’ دی ٹیلی گراف‘‘ کے مطابق 22 سالہ پاکستانی نوجوان عاصم عباسی نے کچھ روز قبل بارش کے دوران بس میں سوار ہوتے وقت اپنے کرکٹ بیٹ کو شرٹ میں چھپا لیا تاکہ وہ گیلا نہ ہو لیکن دیکھنے والے کو گن کی طرح نظر آیا اور ان کی بس سے لی گئی اس تصویر کو دیکھ کر پولیس نے عاصم کو دہشت گرد قرار دیتے ہوئے نہ صرف پورے علاقے میں سرکولیٹ کردیا بلکہ اخبارات میں بھی اس کی تصاویر کے ساتھ یہ خبر لگادی کہ ایک مسلح دہشت گردبرسلز میں گھوم رہا ہے، چونکہ عاصم نے داڑھی بھی رکھی ہوئی تھی اس لیے پولیس کو یقین ہوگیا یہ کوئی دہشت گرد ہی ہے۔

    اخبار کے مطابق جیسے ہی عاصم نے اپنی یہ تصاویر اخبارات میں دیکھیں اس نے فوری طورپر پولیس سے رابطہ کرکے انہیں بتایا کیا کہ وہ مسلح نہیں تھا بلکہ اس نے کرکٹ بیٹ کو شرٹ میں چھپایا تھا کیونکہ بارش ہورہی تھی اور اسے خدشہ تھا کہ اگر بیٹ گیلا ہوگیا تو اس سے بیٹنگ نہیں کر پائے گا۔ عاصم عباسی کی جانب سے پولیس سے رابطہ کرنے کے باوجود اسے اپنے 7 افراد پر مشتمل خاندان سمیت بیلجیم کی شہریت سے ہاتھ دھونا پڑ گئے۔ دوسری جانب بیلجیم پولیس کو نوجوان سے معافی نہ مانگے پر سخت تنقید کا نشانہ بنایا جارہا ہے جب کہ اس صورت حال پر پاکستانی سفارت خانے نے کسی بھی قسم کے تبصرہ سے انکار کردیا ہے۔

    برسلز میں پاکستانی سفارت خانے میں تعینات ان کے والد طفیل عباسی کو پاکستان کا امیج خراب کرنے کی پاداش میں فارغ کردیا گیا ہے۔ عاصم کا کہنا تھا کہ اسے پاکستانی سفارت خانے سے فون آیا کہ وہ اپنے پاسپورٹ واپس کردیں کیونکہ ان کا پورا خاندان بیلجیم میں رہنے کا حق کھو چکا ہے۔ ادھر دفتر خارجہ کی ترجمان نے معاملے پر وضاحت جاری کرتے ہوئے کہا کہ طفیل عباسی کی مدت ملازمت مارچ 2014 میں پوری ہوچکی اور ان کا تبادلہ معمول کی بات ہے۔ ترجمان نے عاصم عباسی کے الزامات کو مسترد کرتے ہوئے کہا ہے کہ ان کی جانب سے لگائے گئے الزامات میں صداقت نہیں۔

    واضح رہے کہ رواں سال کے آغاز میں برسلز میں یہودیوں کے میوزیم پر حملے کے بعد سے پبلک ٹرانسپورٹ میں کسی بھی قسم کا اسلحہ یا ایسی کوئی بھی چیز لے جانے پر پابندی ہے جس سے کسی کو نقصان پہنچنے کا خطرہ ہو۔
    http://www.express.pk/story/305429/
     
    • پسندیدہ پسندیدہ x 2
  2. بابر تنویر

    بابر تنویر -: ممتاز :-

    شمولیت:
    ‏دسمبر 20, 2010
    پیغامات:
    7,319
    بات ساری داڑھی کی ہے۔ کتنا ڈرتے ہیں یہ داڑھی والوں سے۔ اللہ کرے کے تمام مسلمان داڑھی کو ا پنا لیں۔ آپ کو اس انڈین خاتون کا ڈر تو یاد ہوگا۔ جب اس کے ساتھ بیٹھے ہوۓ داڑھی والے مسلمان نے کہا کہ جہاز تھوڑی دیر میں اڑنے والا ہے ۔ بات تو سیدھی سادی تھی۔ لیکن چونکہ ایک داڑھی والے مسلمان کے منہ سے نکلی تھی اس لیے وہ سمجھ بیٹھی کہ جہاز اڑنے نہیں بلکہ "اڑنے " والا ہے۔
    اس داڑھی والے نوجوان کو تلاش کرنے سے پہلے ہی اس کے دہشت گرد ہونے کا ڈھنڈورا پیٹ دیا گیا۔ اور اس سب میں ہمارے اپنے سفارت کا کردار سب سے شرمناک ہے۔جس نے حقیقت حال جانے بغیر ہی اس نوجوان کو دہشٹ گرد سمجھ لیا۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ x 1
  3. عفراء

    عفراء webmaster

    شمولیت:
    ‏ستمبر 30, 2012
    پیغامات:
    3,918
    اتنا ظلم۔۔۔
     
  4. بابر تنویر

    بابر تنویر -: ممتاز :-

    شمولیت:
    ‏دسمبر 20, 2010
    پیغامات:
    7,319
    اتنا ڈر؟
     
  5. عفراء

    عفراء webmaster

    شمولیت:
    ‏ستمبر 30, 2012
    پیغامات:
    3,918
    مطلب؟
     
  6. عفراء

    عفراء webmaster

    شمولیت:
    ‏ستمبر 30, 2012
    پیغامات:
    3,918
    ویسے داڑھی بھی بے چارے کی اتنی بڑی نہیں ہے اتنی تو غیر مسلم بھی رکھتے ہوتے ہیں فیشن میں۔
     
  7. بابر تنویر

    بابر تنویر -: ممتاز :-

    شمولیت:
    ‏دسمبر 20, 2010
    پیغامات:
    7,319
    مطلب صاف ظاہر ہے۔ ایک داڑھی والا شخص کوئ چیز چھپاۓ چلا جارہا ہے۔ ایک مفروضہ یہ قائم کیا گیا ہوگا کہ یہ مسلمان ہے تو دوسرا مفروضہ یہ کہ جو چیز اس نے چھپائ ہوئ ہے وہ اسلحہ ہے۔ یہ ڈر نہیں ہے تو اور کیا ہے؟
     
  8. عائشہ

    عائشہ ركن مجلس علماء

    شمولیت:
    ‏مارچ 30, 2009
    پیغامات:
    24,488
    اندھیر نگری ہے ، پولیس اور صحافت سب کا معیار دیکھیں اور آخر میں سفارت کا بھی۔۔۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ x 1
  9. dani

    dani نوآموز.

    شمولیت:
    ‏اکتوبر، 16, 2009
    پیغامات:
    4,330
    اوئے ہوئے اتنی سی داڑھی پر اتنا شور
     
  10. بابر تنویر

    بابر تنویر -: ممتاز :-

    شمولیت:
    ‏دسمبر 20, 2010
    پیغامات:
    7,319
    اسی تناظر میں ذرا اس ویڈیو کو دیکھیں۔ اس کہتے ہیں دہرا معیار
    [
    اور جو بات میں نے ڈر کے حوالے سے کی تھی ایک بھائ نے کچھ ایسے کمنٹس دیے ہیں
    • Farhan AhmedWow, that means we (Muslims) are the symbol of fear for them... thats great because it shows that they are still scared of us. ALHAMDULILLAH
     
    Last edited: ‏دسمبر 1, 2014
Loading...

اردو مجلس کو دوسروں تک پہنچائیں