سوشل میڈیا کے علامہ، سکالرز اور استاذ

عائشہ نے 'ذرائع ابلاغ' میں ‏اگست 14, 2016 کو نیا موضوع شروع کیا

  1. عائشہ

    عائشہ ركن مجلس علماء

    شمولیت:
    ‏مارچ 30, 2009
    پیغامات:
    24,495
    ایک زمانے میں علامہ کا لقب بہت پٹ گیا تھا، اور پٹا ان کی وجہ سے تھا جو خود کو زبردستی علامہ کہلواتے تھے بلکہ طرہ یہ کہ نہ کہنے والے سے ناراض ہو جاتے تھے، پھر زمانے نے کروٹ لی، خود کو علامہ کہلوانے والوں نے سکالر کہلوانے پر اصرار شروع کر دیا، جتنی تیزی سے کیبل چینل اگے اتنی ہی تیزی سے سکالر پھوٹے، جس طرح برسات میں کھمبیاں اگتی ہیں یا کائی لگتی ہے بالکل اسی طرح آج کل استاذ پیدا ہو رہے ہیں، کل مسیں بھیگتی ہیں آج استاذ ہو جاتے ہیں۔تفسیر اور تجوید کے ابتدائی ڈپلومےحاصل کرتے ہی استاذہ بننے کا رجحان بھی زوروں پر ہے۔ جس نے کسی جامعہ کی شکل نہیں دیکھی وہی استاذ ہے۔ طب نبوی اور طب جدید دونوں کا بیڑہ غرق اور مریض کا سوا ستیاناس کرنے والے نیم حکیموں کا جمعہ بازار لگتا جا رہا ہے۔ جس کا بس اپنے میدان میں نہیں چلا وہ بڑے فخر سے بتاتا ہے کہ ویسے تو میرا میدان اور ہے لیکن میں تم کو تفسیر کتاب اللہ پڑھانے پر مامور ہوں۔ جھاڑ پھونک المعروف امیر خواتین کا بالمشافہ روحانی علاج بھی ایک سائڈ بزنس کے طور پر جاری ہے۔ یوٹیوب پر پانچویں وڈیو آتے ہی "حضرت استاذ" علمی شہرت کے حامل قرار پاتے ہیں۔ علمی القاب پر ہماری قوم جس تیزی سے ہاتھ صاف کرتی ہے اتنا زور حصول علم پر لگاتی تو آج تنزلی کا یہ عالم نہ ہوتا۔
    سوشل میڈیا اور الیکٹرانک میڈیا کو فالو کرنے والے طفلان مکتب سے بس اتنی سی درخواست ہے کہ جس "استاذ" سے سبق لیں پہلے اس کی علمی قابلیت پر حقیقت پسندانہ نگاہ ڈال لیں کہیں ایسا نہ ہو کہ کوئی ابلیس کا متعین کردہ استاذ انہیں کسی اور جانب لے جائے۔ دین کا علم اتنی سستی چیز نہیں کہ ہر جگہ سے لے لی جائے۔ احتیاط علاج سے بہتر ہے۔ اور جن سے بے تکلفی ہے ان سے کہنا ہے کہ آپ کے ذوق کو کیا ہو گیا بھئی؟
     
    Last edited: ‏اگست 14, 2016
    • پسندیدہ پسندیدہ x 6
    • متفق متفق x 2
    • اعلی اعلی x 2
  2. بابر تنویر

    بابر تنویر منتظم

    شمولیت:
    ‏دسمبر 20, 2010
    پیغامات:
    7,316
    درست فرمایا۔ جزاک اللہ خیرا
     
    • پسندیدہ پسندیدہ x 2
  3. عطاءالرحمن منگلوری

    عطاءالرحمن منگلوری -: ماہر :-

    شمولیت:
    ‏اپریل 9, 2012
    پیغامات:
    1,470
    جزاک اللہ خیرا۔درست تجزیہ۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ x 1
  4. ابوعکاشہ

    ابوعکاشہ منتظم

    رکن انتظامیہ

    شمولیت:
    ‏اگست 2, 2007
    پیغامات:
    15,860
    سب کو اپنے منجن کی فکر ھے . بیچنا ھے. اصلی نقلی کا فرق کون دیکھتا ھے
     
    • پسندیدہ پسندیدہ x 1
  5. عائشہ

    عائشہ ركن مجلس علماء

    شمولیت:
    ‏مارچ 30, 2009
    پیغامات:
    24,495
    وایاک۔
     
  6. انا

    انا -: ممتاز :-

    شمولیت:
    ‏اگست 4, 2014
    پیغامات:
    1,400
    جزاک اللہ خیرا۔ ابھی چند دن پہلے ہی خواتین کی خوفناک سزاؤں کے متعلق ایک حدیث کسی دوست نے گروپ پر شئر کی ۔ چند جملے پڑھ کر ہی محسوس ہوا کہ یہ الفاظ حدیث کے نہیں ہو سکتے ۔ تحقیق پر معلوم ہوا کہ شیعہ لوگوں کی اڑائی ہوئی باتیں ہیں ۔ دوست سے پوچھ گچھ کی تو دلیل یہ ملی کہ جہاں سے حدیث سنی تھی وہ خاتون ہمیشہ صحیح حدیث بتاتی ہیں اس لیے آگے بھیجنے سے پہلے خود تحقیق نہین کی ۔ ٹی وی ، ویڈیو وغیرہ کے سکالر بھی چلو سب کے سامنے آ تو جاتے ہیں ۔ جو گھروں کے اندر بیٹھ کر سکالر بن جائیں ان سے محتاط رہنا تو اور بھی مشکل ہے۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ x 2
  7. عائشہ

    عائشہ ركن مجلس علماء

    شمولیت:
    ‏مارچ 30, 2009
    پیغامات:
    24,495
    • متفق متفق x 2
  8. انا

    انا -: ممتاز :-

    شمولیت:
    ‏اگست 4, 2014
    پیغامات:
    1,400
    • پسندیدہ پسندیدہ x 2
  9. عائشہ

    عائشہ ركن مجلس علماء

    شمولیت:
    ‏مارچ 30, 2009
    پیغامات:
    24,495
    وایاک، دیکھیے جن کو مستند احادیث پڑھنے کا شوق ہوتا ہے وہ دیکھ کر ہی سمجھ جاتے ہیں، اسی لیے مطالعہ مستند چیزوں کا ہی کرنا چاہیے تا کہ ذوق خراب نہ ہو۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ x 2
  10. عمر اثری

    عمر اثری -: رکن مکتبہ اسلامیہ :-

    شمولیت:
    ‏نومبر 21, 2015
    پیغامات:
    459
    واقعی یہ ایک المیہ ہے. اگر کسی کو سمجھانے جاؤ تو بدلے میں صلواتیں اور گالیاں ہی سننے کو ملتی ہیں. کوئی محدث ومحقق بنا ہوا ہے، کوئی مفتی بنا ہوا ہے تو کوئی کچھ اور.
    میں اپنا خود کا واقعہ سناتا ہوں:
    ایک بار کسی نے خبر دی کہ ایک گروپ ہے جس میں صرف لڑکیاں ہیں. بس ایک ہی لڑکا ہے جو گروپ ایڈمن ہے. انھوں نے مزید بتایا کہ وہ لڑکا سب لڑکیوں سے ہنسی مذاق کرتا ہے. ایک لڑکی نے اعتراض کیا کہ آپ ہنسی مذاق کیوں کرتے ہیں تو جواب دیا گیا کہ ہنسی مذاق کرنا سنت رسول صلی اللہ علیہ وسلم ہے (نعوذبااللہ من ذلک). اس لڑکی نے کہا کہ کیا لڑکیوں سے ہنسی مذاق کرنا سنت ہے تو جواب ملا کہ ہاں؟؟؟؟
    اب جس نے مجھے بتایا انھوں نے کہا کہ آپ ذرا انکو سمجھائیں. لیکن جب میں نے سمجھایا تو بدلے میں گالیاں دی گئیں.

    یہ صرف ایک پہلو ہے. اگر ہر ہر پہلو کو لیا جاۓ تو کئ صفحات لکھے جا سکتے ہیں.
    بہت دکھ ہوتا ہے مجھے. :(
     
    • پسندیدہ پسندیدہ x 5
  11. عائشہ

    عائشہ ركن مجلس علماء

    شمولیت:
    ‏مارچ 30, 2009
    پیغامات:
    24,495
    ضرور لکھیے شاید کہ کسی دل میں اتر جائے تری بات
     
    • پسندیدہ پسندیدہ x 3
  12. عمر اثری

    عمر اثری -: رکن مکتبہ اسلامیہ :-

    شمولیت:
    ‏نومبر 21, 2015
    پیغامات:
    459
    جی ان شاء اللہ محترمہ آپی. بس امتحان ختم ہو جائیں. اور مقالہ مکمل کر لوں
     
    • پسندیدہ پسندیدہ x 1
  13. عائشہ

    عائشہ ركن مجلس علماء

    شمولیت:
    ‏مارچ 30, 2009
    پیغامات:
    24,495
    آج کل ایک یوٹیوب استاذ پکڑے گئے ہیں۔ میرے خیال میں انہیں لقب استاذ سے بدسلوکی کی سزا ملی ہے۔ امید ہے قوم کو کچھ عقل آئے گی۔
     
  14. عائشہ

    عائشہ ركن مجلس علماء

    شمولیت:
    ‏مارچ 30, 2009
    پیغامات:
    24,495
    اس میں کوئی شک نہیں کہ دین کی دعوت کانٹوں پر چلنے کے برابر ہے۔ خود دین کا علم حاصل کرنا اور سچے علما کرام سے جڑے رہنا بھی بہت ثابت قدمی کا کام ہے ہر طالب علم کا نفس یہی چاہتا ہے کہ تھوڑے نرم اور آسان دینی رہنما مل جائیں۔ اسی نفس پرستی میں انسان نفس پرستوں کو رہنما بنا لیتا ہے۔ خدا کی لاٹھی بڑی بے آ واز ہے۔ جھوٹی شہرت سے گر کر علما کو کوسنے والے جتنا بھی شور کریں۔ پکڑے گئے اور برے پکڑے گئے۔ ایک بار پھر ثابت ہوا کہ علما کی تحقیر کرنے والے بچتے نہیں۔.
     
    Last edited by a moderator: ‏اکتوبر، 13, 2017
    • پسندیدہ پسندیدہ x 1
  15. عائشہ

    عائشہ ركن مجلس علماء

    شمولیت:
    ‏مارچ 30, 2009
    پیغامات:
    24,495
  16. بابر تنویر

    بابر تنویر منتظم

    شمولیت:
    ‏دسمبر 20, 2010
    پیغامات:
    7,316
    شرم ان کو مگر نہیں آتی۔
     
    • متفق متفق x 1
  17. عائشہ

    عائشہ ركن مجلس علماء

    شمولیت:
    ‏مارچ 30, 2009
    پیغامات:
    24,495
    ان کے پاس اس عمل کے بھی سود لائل ہوں گے۔سماع وجد اور قوالی جیسی بھاری بھرکم صوفیانہ اصطلاحات استعمال کرکے اس اچھل کود کو جائز قرار دے لیں گے۔
     
  18. بابر تنویر

    بابر تنویر منتظم

    شمولیت:
    ‏دسمبر 20, 2010
    پیغامات:
    7,316
    بالکل صحیع کہا۔ ابھی کچھ دیر پہلے ایک چینل پر وہ اسی قسم کے بودے دلائل سے اپنے عمل گو درست ثابت کرنے کی کوشش کر رہے تھے
     
    • معلوماتی معلوماتی x 1

اردو مجلس کو دوسروں تک پہنچائیں