دل كے مردہ اور زندہ ہونے كے تین نشانیاں

عمر اثری نے 'ضعیف اور موضوع احادیث' میں ‏دسمبر 13, 2018 کو نیا موضوع شروع کیا

  1. عمر اثری

    عمر اثری -: رکن مکتبہ اسلامیہ :-

    شمولیت:
    ‏نومبر 21, 2015
    پیغامات:
    461
    دل كے مردہ اور زندہ ہونے كے تین نشانیاں ہیں؟

    سوال: کیا یہ حدیث صحیح ہے؟
    ”تین جگہوں پر اپنے دل کو دیکھو....لگتا ہے یا گھبراتا ہے....
    1- قرآن كے سامنے بیٹھ کر دیکھو دل لگتا ہے یا گھبراتا ہے؟
    2- ذکر کی مجالس میں بیٹھ کر دیکھو دل لگتا ہے یا گھبراتا ہے؟
    3- تنہائی میں بیٹھ کر دیکھو دل اللہ كے لئے تڑپتا ہے یا گھبراتا ہے؟
    اگر تیرا دل قرآن سے گھبرائے، اللہ كے ذکر کی مجالس سے گھبرائے، تنہائی سے گھبرائے تو تو اللہ سے مانگ کہ اللہ تجھے دل عطا فرمائے، تیرا دل مر چکا ہے۔


    جواب: اسکی کوئی بھی صحیح یا ضعیف سند مجھے نہیں مل سکی۔ مشہور ویب سائٹ ”الدرر السنیۃ“ میں اس کے متعلق لکھا ہے:
    ليس بحديث، بل هو من كلام الإمام ابن القيِّم في كتابه ((الفوائد))
    ”یہ حدیث نہیں ہے، بلکہ یہ امام ابن القیم رحمہ اللہ کا کلام ہے جو انکی کتاب «الفوائد» میں موجود ہے۔“

    گویا کہ یہ سرے سے حدیث ہی نہیں ہے لہذا اس کی نسبت نبی ﷺ کی طرف کرنا جائز نہیں۔
    ابن القیم رحمہ اللہ سے یہ قول بایں الفاظ مروی ہے:
    اطلب قلبك في ثلاثة مواطن: عند سماع القرآن، وفي مجالس الذِّكر، وفي أوقات الخَلوة، فإن لم تجده في هذه المواطن، فاسأل الله أن يمن عليك بقلب؛ فإنه لا قلب لك
    ”تین مقامات پر اپنے دل کو تلاش کرو:
    1- قرآن سنتے وقت
    2- ذکر کی مجالسں میں
    3- خلوت کے اوقات میں
    اگر ان مقامات میں اپنے دل کو نہ پاؤ تو اللہ ﷻ سے دل مانگو کیونکہ تمہارے پاس دل نہیں۔“
    (الفوائد لابن القیم بتحقیق الشیخ محمد عزیر شمس: 218)

    فائدہ: یہ قول ابن مسعود رضی اللہ عنہ کی طرف بھی منسوب کر کے بیان کیا جاتا ہے۔ لیکن اس قول کی نسبت ابن مسعود رضی اللہ عنہ کی طرف کرنا صحیح نہیں ہے جیسا کہ شیخ ابو عمر اسامہ العتیبی نے وضاحت کی ہے۔

    کتبہ: عمر اثری سنابلی
     
    • مفید مفید x 3
    • پسندیدہ پسندیدہ x 1
  2. بابر تنویر

    بابر تنویر -: ممتاز :-

    شمولیت:
    ‏دسمبر 20, 2010
    پیغامات:
    7,319
    جزاک اللہ خيرا
     
    • پسندیدہ پسندیدہ x 1
  3. عمر اثری

    عمر اثری -: رکن مکتبہ اسلامیہ :-

    شمولیت:
    ‏نومبر 21, 2015
    پیغامات:
    461
    وایاکم
     
  4. عائشہ

    عائشہ ركن مجلس علماء

    شمولیت:
    ‏مارچ 30, 2009
    پیغامات:
    24,487
    ماشاءاللہ بہت عمدہ۔ آپ کے پاس محترم عزیر شمس صاحب کی تحقیق والی الفوائد ہے۔ بہت خوش قسمت ہیں۔ہماری امت کے خاموش علمی مجاہدوں میں سے ایک ہیں شیخ۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ x 3
  5. عمر اثری

    عمر اثری -: رکن مکتبہ اسلامیہ :-

    شمولیت:
    ‏نومبر 21, 2015
    پیغامات:
    461
    جی ہمارے کلیۃ میں ہے۔ البتہ ذاتی مکتبہ میں نہیں ہے۔ بس کوشش کر رہے ہیں کہ کسی طرح کتابیں خرید سکیں۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ x 2
  6. ابوعکاشہ

    ابوعکاشہ منتظم

    رکن انتظامیہ

    شمولیت:
    ‏اگست 2, 2007
    پیغامات:
    15,902
    جزاک اللہ خیرا. اچھی تحریر ہے. شیخ عزیز شمس حفظ اللہ کا تحقیقی کام شیخ الاسلام ابن تیمیہ و ابن قیم کی کتب و سیرت پر ہی ہے. عرب انہیں اس حوالے سے ہی زیادہ جانتے ہیں. تحقیقی کتب کی تلاش ہمیں بھی ہے.لیکن نہیں ملی. شیخ سے ہی درخواست کرنی ہو گی.
     
    • پسندیدہ پسندیدہ x 1
Loading...

اردو مجلس کو دوسروں تک پہنچائیں