گونجے گی تری آزاد فضاؤں میں تکبیر اے وادئ کشمیر

عائشہ نے 'کلامِ سُخن وَر' میں ‏فروری 5, 2019 کو نیا موضوع شروع کیا

  1. عائشہ

    عائشہ ركن مجلس علماء

    شمولیت:
    ‏مارچ 30, 2009
    پیغامات:
    24,496
    شاعر : سلیم ناز بریلوی
    اب بن کے رہے گی تری بگڑی ہوئی تقدیر
    اے وادئ کشمیر اے وادئ کشمیر
    اللہ کا فرمان ہے ایمان ہمارا
    ہم سے تو یہی کہتا ہے قرآن ہمارا
    جنت کبھی ہو سکتی نہیں کفر کی جاگیر
    اے وادئ کشمیر اے وادئ کشمیر

    ٹینکوں کا خطر لشکر کفار کا ڈر کیوں
    اسلام کو ہو کفر کی یلغار کا ڈر کیوں
    اسلام کے ہاتھوں میں ہے ایمان کی شمشیر
    اب بن کے رہے گی تری بگڑی ہوئی تقدیر
    اے وادئ کشمیر اے وادئ کشمیر

    کچھ فکر نہیں خون کے دریا جو بہیں گے
    ہم کفر کے طوفان سے ٹکرا کے رہیں گے
    توڑیں گے تیرے پاؤں سے ہر ظلم کی زنجیر
    اب بن کے رہے گی

    ظالم کا جہاں زیروزبر ہو کے رہے گا
    مظلوم کی آہوں کا اثر ہو کے رہے گا
    گونجے گی تیری آزاد فضاؤں میں تکبیر
    اے وادئ کشمیر اے وادئ کشمیر

    آڈیو ربط
     
    Last edited: ‏فروری 5, 2019
    • پسندیدہ پسندیدہ x 1

اردو مجلس کو دوسروں تک پہنچائیں